جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

ارفع کریم رندھاوا کی آج آٹھویں برسی منائی جارہی ہے

ارفع کریم رندھاوا

فیصل آباد : فخر پاکستان اور پہچان پاکستان ارفع کریم رندھاوا کی آج آٹھویں برسی منائی جارہی ہے۔

کم عمری میں ہی پاکستان کی پہچان بننے والی کم عمرترین مائیکرو سافٹ سرٹیفائیڈ پروفیشنل ارفع کریم رندھاوا کی آج آٹھویں برسی منائی جارہی ہے۔

ارفع کریم 2 فروری 1995 کو فیصل آباد میں پیدا ہوئیں۔ صرف 9 برس کی عمر میں دنیا کی کم عمر ترین مائیکرو سافٹ سرٹیفائیڈ کا اعزاز حاصل کیا۔

ارفع نے اپنی لازوال کاوش کی بنا پر فاطمہ جناح گولڈ میڈل، سلام پاکستان یوتھ ایوارڈ اور صدارتی پرائڈ آف پرفارمنس سمیت دیگراعزازات بھی حاصل کیے۔

سن دو ہزار پانچ میں مائیکرو سافٹ کے خالق بل گیٹس نے ارفع کریم سے خصوصی ملاقات کی اور مائیکرو سافٹ سرٹیفائیڈ ایپلی کیشن کی سند عطا کی۔

یہ بھی پڑھیں : ارفع کریم، پاکستان کی ہونہار اور ذہین بیٹی آج بھی ہمارے دلوں میں زندہ ہے : وزیر اعلیٰ پنجاب

مائیکرو سافٹ نے بار سلونا میں منعقدہ سن 2006 کی تکنیکی ڈیولپرز کانفرنس میں پوری دنیا سے پانچ ہزار سے زیادہ مندوبین میں سے پاکستان سے صرف ارفع کریم کو مد عو کیا تھا۔

ارفع کریم نے دبئی کے فلائنگ کلب میں صرف دس سال کی عمر میں ایک طیارہ اڑایا اور طیارہ اڑانے کا سرٹیفیکٹ بھی حاصل کیا ۔

ارفع کو 22 دسمبر 2011 کو مرگی کا دورہ پڑنے پر لاہور کے اسپتال میں منتقل کیا گیا، جہاں وہ کچھ روز کومے میں رہنے کے بعد 14 جنوری 2012 کو خالق حقیقی سے جا ملیں، لیکن مائیکرو سافٹ کی تاریخ میں ناقابل فراموش نقوش چھوڑ گئیں۔

متعلقہ خبریں