جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

جزام کے خلاف جہاد کرنے والی ڈاکٹر رتھ فاؤ کی آج تیسری برسی منائی جارہی ہے

کراچی : پاکستان میں بے مثال خدمات انجام دینے والی ڈاکٹر رتھ فاؤ کی تیسری برسی آج منائی جارہی ہے، انہوں نے اپنی زندگی جزام کے خلاف جنگ کیلئے وقف کی۔

جرمنی میں پیدا ہونے والی ڈاکٹر رتھ فاؤ کا شمار پاکستان کی ایک ایسی عظیم محسن کی صورت میں ہوتا ہے، جن کی کاوشوں کی بدولت عالمی ادارہ صحت نے پاکستان کو جزام کے مرض پر قابو پالینے والے ممالک میں شامل کرلیا گیا تھا۔

ڈاکٹر کیتھرینا رتھ فاؤ نو ستمبر انیس سو انتس کو جرمنی میں پیدا ہوئیں، لیکن ان کا دل پاکستان میں دھڑکتا تھا، یہی وجہ تھی کہ انہوں نے اپنی زندگی کے ستاون سال پاکستان میں انسانیت کی خدمت کے لئے وقف کردیے اور مرتے دم تک یہ خدمت کا سلسلہ جاری رہا۔

یہ بھی پڑھیں : معروف سماجی کارکن سسٹر رتھ لوئس کورونا کے باعث انتقال کرگئیں

انیس سو ساٹھ میں ڈاکٹر رتھ فاؤ نے کراچی میں جزام کے علاج کے لئے میری ایڈیلیڈ لیپرسی سینٹر کے نام سے ادارہ قائم کیا، اس مرض کے خاتمے کیلئے ملک کے دوسرے علاقوں میں بھی کلینکس قائم گئے۔

حکومت نے انیس سو اٹھاسی میں ڈاکٹر رتھ کو پاکستان کی شہریت دی۔ ان کی گرا ںقدر خدمات پر حکومت پاکستان نے انہیں نشان قائد اعظم، ہلال پاکستان، ہلال امتیاز سے نوازا۔

ڈاکٹر رُتھ فاؤ زندگی بھر پاکستانیوں کی خدمت میں مصروف عمل رہیں، انہیں پاکستان کی مدر ٹریسا بھی کہا جاتا ہے، لاکھوں مریضوں کے چہروں پر مسکراہٹ بکھیرنے والی ڈاکٹر رتھ فاؤ دس اگست بیس سو سترا کو کراچی میں انتقال کر گئیں۔

متعلقہ خبریں