جی ٹی وی نیٹ ورک
اہم خبریں

ترکی نے فن لینڈ اور سویڈن کی نیٹو میں شمولیت پر اپنا اعتراض ختم کردیا

فن لینڈ اور سویڈن کی

میڈرڈ : نیٹو کے اتحادی ترکی نے مغربی اتحاد میں شامل ہونے کے لیے فن لینڈ اور سویڈن کی درخواست پر  اپنی مخالفت ختم کردی ہے۔

نیٹو کے سربراہی اجلاس کے شروع ہونے سے چار گھنٹے قبل ہونے والی بات چیت نے فِن لینڈ اور سویڈن کی مغربی اتحاد میں شمولیت کی بڑی رکاوٹ ختم کردی۔ دوران مذاکرات تینوں ممالک نے ایک دوسرے کی سلامتی کے تحفظ پر اتفاق کیا۔

اس پیش رفت کے بعد ہیلسنکی اور اسٹاک ہوم جوہری ہتھیاروں سے لیس اتحاد میں شمولیت کے لیئے اپنی درخواست کو آگے بڑھا سکتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں : ترکی کا نام تبدیل، ’ترکیے‘ کے نام لکھا پڑھا اور پکارا جائے گا

فن لینڈ کے صدر نینیستو نے ایک بیان میں کہا کہ ہمارے وزرائے خارجہ نے ایک سہ فریقی یادداشت پر دستخط کیے، جو اس بات کی تصدیق کرتا ہے کہ ترکی، فِن لینڈ اور سویڈن کو نیٹو کا رکن بننے کی دعوت کی حمایت کرے گا۔

نیٹو کے سیکریٹری جنرل جینز اسٹولٹنبرگ اور ترکی کے ایوان صدر نے نیٹو کے سربراہ، ترک صدر طیب اردگان، سویڈش وزیر اعظم مگدالینا اینڈرسن اور نینیستو کے درمیان بات چیت کے بعد، الگ الگ بیانات میں اس معاہدے کی تصدیق کی۔

متعلقہ خبریں