جی ٹی وی نیٹ ورک
اہم خبریں

ترکی کی سویڈن اور فن لینڈ کی نیٹو میں شمولیت کی مخالفت، امریکہ کی منانے کی کوشش

سویڈن اور فن لینڈ

واشنگٹن : ترکی کی سویڈن اور فن لینڈ کی مخالفت پر وائٹ ہاؤس کا کہنا ہے کہ ہم انقرہ کے مؤقف کو بہتر طور پر سمجھنے کے لیے کام کر رہے ہیں۔

وائٹ ہاؤس کی ترجمان جین ساکی نے کہا ہے کہ صدر رجب طیب اردگان کی جانب سے فن لینڈ اور سویڈن کی نیٹو میں شمولیت کی مخالفت کے اظہار کے بعد واشنگٹن ترکی کی پوزیشن واضح کرنے کے لیے کام کر رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ امریکہ انقرہ کے مؤقف کو بہتر طور پر سمجھنے کے لیے کام کر رہا ہے۔ ترکی نیٹو کا ایک قابل قدر اتحادی ہے، اس میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں : روس، یوکرین مذاکرات میں معاہدے کے قریب ہیں : ترکی

ان کا کہنا تھا کہ ترکی روس اور یوکرین کے درمیان بات چیت کی کوششوں میں شامل اور مددگار رہا ہے۔ انہوں نے یوکرین کو مدد بھی فراہم کی ہے۔ اس لیے نیٹو اتحاد میں ان کے مؤقف میں کوئی تبدیلی نہیں آئی۔

واضح رہے کہ ترک صدر نے صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ اتحاد میں شامل ہونے والے دونوں ممالک کے بارے میں ہماری رائے مثبت نہیں ہے۔ وہ دہشت گرد تنظیموں کو پناہ دیتے ہیں۔

ترکی نے باالخصوص سویڈن پر انتہاء پسند کرد گروپوں کے ساتھ ساتھ 2016 کی ناکام بغاوت کے لیے مطلوب امریکی مبلغ فتح اللہ گولن کے حامیوں کو پناہ دینے کا الزام لگایا ہے۔

متعلقہ خبریں