جی ٹی وی نیٹ ورک
دنیا

امریکی صدر نے کہا کہ روس اور ایران کو ہی کو داعش سے نمٹنا چاہیے : جان بولٹن کی کتاب میں انکشاف

جان بولٹن

واشنگٹن : سابق مشیر قومی سلامتی جان بولٹن نے اپنی کتاب میں امریکی صدر سے متعلق بڑے انکشافات کردیئے ہیں، ٹرمپ نے جوابی حملے میں بیمار کتے کے پلے سے تشبیہ دے دی۔

امریکا کے سابق مشیر قومی سلامتی جان بولٹن نے اپنی کتاب میں انکشاف کیا ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے امریکی فوجیوں سے کہا کہ داعش سے روس کو نمٹنے دیں اور شام میں بھی روس اور ایران ہی کو داعش سے نمٹنا چاہیے۔

جان بولٹن کے مطابق صدر ٹرمپ نے 7 ہزار میل دور ہونے کے باوجود امریکا کو داعش کا ہدف قرار دیا۔ ٹرمپ نے کہا کہ امریکا کبھی بھی افغانستان سے نہیں نکل سکے گا، افغانستان میں جو کچھ ہورہا ہے، سب بش نامی احمق کا کیا دھرا ہے۔ افغانستان میں لاکھوں لوگ مارے گئے، کھربوں ڈالر خرچ ہوگئے۔

یہ بھی پڑھیں : امریکی صدر کا اپنی حکومت کے خلاف سازش کو ناکام بنانے کا دعویٰ

سابق مشیر قومی سلامتی نے اپنی کتاب میں مزید انکشاف کیا کہ صدر ٹرمپ نے کہا کہ امریکا افغانستان سے انخلاء نہیں کر پارہا، ہماری پٹائی ہورہی ہے، امریکی صدر نے افغانستان میں امریکا کے خصوصی مندوب زلمے خلیل زاد کو دھوکے باز کہا۔ ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ اس مقصد کے لیے دھوکے باز ہی کی ضرورت پڑتی ہے۔

دوسری طرف امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کتاب پر اپنے ردعمل میں جان بولٹن کو بیمار کتے کے پلے سے تشبیہ دے دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جان بولٹن نے میرے خلاف کہانیاں گھڑی ہیں تاکہ مجھے برا بنا سکے۔

متعلقہ خبریں