جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

وفاقی کابینہ نے مزید 22 پائلٹوں کے لائسنس منسوخ کرنے کی منظوری دیدی

وفاقی

اسلام آباد: وزارت ہوابازی نے وفاقی کابینہ میں قومی فضائی کمپنی کے پائیلیٹس کے جعلی اور مشکوک لائسنس سے متعلق حتمی رپورٹ جمع کرا دی۔ کابینہ نے وزارت ہوا بازی کی رپورٹ پر مزید بائیس پائلٹوں کے لائسنس منسوخ کرنے کی منظوری دے دی۔

وفاقی کابینہ میں جمع کی جانے والی حتمی رپورٹ کے مطابق پی آئی اے کے 76 پائیلٹس کے لائیسنس مشکوک قرار دئے گئے ہیں۔

اس سے قبل ایوی ایشن ڈویژن کی ابتدائی رپورٹ میں 193 پائیلٹس کے لائیسنس مشکوک قرار دئے گئے تھے جبکہ وزیر ہو ابازی کی جانب سے 24 جون کو قومی اسمبلی میں 262 پاکستانی پائلٹس کے لائسنس مشتبہ ہونے کا اعلان کیا تھا جس کے باعث مختلف غیر ملکی ائر لائنز میں تعینات پاکستانی پائلٹس کو کام سے بھی روک دیا گیا تھا۔

وفاقی کابینہ نے رپورٹ کی بنیاد پر مزید 22 پائلٹس کے لائسنس فوری منسوخ کرنے جبکہ چھ پائلٹس کے لائسنس عدالتی حکم امتناع حتم ہونے پر منسوخ کرنے کی بھی منظوری دی گئی۔

اس سے قبل وفاقی کابینہ 28 پائلٹس کے مشکوک لائسنسز منسوخ کر چکی ہے۔

مشکوک قرار دئے گئے 76 پائلٹس میں سے 32 پائیلٹس کو صرف ایک سال تک لائسنس معطلی کی بہت معمولی سزا تجویز کی گئی تھی۔

وزیر ہوا بازی کی جانب سے مشکوک قرار دئیے گئے دیگر 186 پائلٹس کی بحالی کے لئے متعلقہ ائیرلائنز کو خطوط ارسال کئے جانے کا سلسلہ جاری ہے۔

متعلقہ خبریں