جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

وزیر اعلیٰ کے پی کے سے اختلافات پر تین وزراء کو اپنے عہدوں سے ہٹادیا گیا

وزراء

پشاور: وزیر اعلیٰ کے ساتھ اختلافات سینئر وزیر عاطف خان، شہرام ترکئی اور شکیل احمد کو لے ڈوبے ہے، تین وزراء کو عہدو سے ہٹھا دیا گیا۔ خیبر پختونخواں ایڈمنسٹریشن ڈیپارٹمنٹ کے کیبنٹ وینگ نے نوٹیفکیشن جاری کردی ہے۔

وزیر اعلی خیبر پختونخوا کے ساتھ اختلافات پر تین وزراء اپنے عہدوں سے ہاتھ دھو بیٹھے، سینئر وزیر عاطف خان، وزیر صحت شہرام ترکئی اور حال ہی میں وزیر روینیوں بننے والے شکیل احمد کو عہدوں سے برطرف کردیا گیا۔

وزیر اعلی محمود خان اور سینئر وزیر عاطف خان کے درمیان اختلافات میں وزیر اعلی محمود خان باری ثابت ہوا ہے، تین وزراء کو عہدوں سے ہٹادیا۔

ذرائع کے مطابق سینئر وزیر عاطف خان ،وزیر صحت شہرام خان ترکئی اور شکیل احمد صوبے میں فارورڈ بلاک بنا رہے تھے، ان وزراء کے ساتھ دس ایم پی ایز بھی شامل ہیں۔ وزیر اعلی محمود خان نے عمران خان کو صوبے میں فارورڈ بلاک آگاہ کیا۔

یہ بھی پڑھیں: حکومت نے پنجاب، سندھ اور کے پی کے میں نئے آئی جیز کو مقرر کردیا

ذرائع کے مطابق تین وزراء کے ہٹانے کا فیصلہ وزیر اعظم عمران خان نے وزیر اعلی محمود سے ملاقات کے بعد کیا۔

ذرائع کا کہنا کہ سینئر وزیر عاطف خان حالیہ کابینہ کے ردبدل اور توسیع سے خوش نہیں تھے، عاطف خان کابینہ میں دو وزراء کو شامل کرنا چاہتے تھے جو نہ ہوسکے۔

ذرائع کے مطابق عہدوں سے ہٹائے جانے والے تین وزراء نے نے پشاور حیات میں بھیٹک کی تھی جسمیں دس ایم پی ایز بھی شامل تھے۔ جس کے بعد وزیر اعلی محمود اور وزیر اعظم کے ملاقات میں ان وزراء کو عہدوں سے ہٹانے کا فیصلہ کیا گیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ وزراء کے علاوہ باقی دس ایم پی ایز کے خلاف بھی کاروائی کی جاسکتی ہے۔

متعلقہ خبریں