جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

ہم نیب کے معاملے پر پارلیمانی طریقہ کار سے پیچھے نہیں ہٹیں گے : سلیم مانڈوی والا

سے پیچھے نہیں

اسلام آباد : ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کا کہنا ہے کہ ہم نیب کے خلاف پارلیمانی طریقہ کار سے پیچھے نہیں ہٹیں گے۔

چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی اور ڈپٹی چیئرمین سینیٹ سلیم مانڈوی والا کے درمیان ملاقات ختم ہوگئی۔ ‏ مشیر داخلہ شہزاد اکبر اور بابر اعوان شرکت کے لیے نہیں پہنچ سکے۔

ذرائع کے مطابق سلیم مانڈوی والا نے نیب سے متعلق تحفظات ایک بار پھر چیئرمین سینیٹ کے سامنے رکھ دیئے۔ سلیم مانڈوی والا نے کہا کہ ‏اپوزیشن کی قرارداد اور میری تحریک استحقاق ابھی بھی موجود ہے۔ ‏قرارداد منظور یا پھر تحریک استحقاق کمیٹی کے سپرد کی جائے۔ چئیرمین سینیٹ نے نیب کے معاملے کو ایوان میں خوش اسلوبی سے زیر بحث لانے کی یقین دہانی کرائی۔

یہ بھی پڑھیں : رخسانہ بنگش کیس : نیب کے کیسز صرف سیاسی بنیادوں پر ہیں : اسلام آباد ہائی کورٹ

سلیم مانڈوی والا نے ملاقات کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ چیئرمین سینیٹ سے آج طویل ملاقات ہوئی ہے۔ شہزاد اکبر لاہور میں موجود ہیں۔ بابراعوان نے ذاتی مصروفیات کے باعث شرکت سے معذرت کی۔

انہوں نے کہا کہ چیئرمین سینیٹ سے نیب کے معاملے پر بات ہوئی۔ چیئرمین سینیٹ کو کہا ہے ہم پارلیمانی طریقہ کار سے پیچھے نہیں ہٹیں گے۔ اگر نیب یا حکومت سمجھتی ہے کہ ایسا کچھ نہیں ہے تو آکر بتا دیں۔

ان کا کہنا تھا کہ شہزاد اکبر نے سینیٹ میں کہا کہ 2 لوگ نیب کی تحویل میں مرے ہیں۔ نیب کہتا رہا ہے کہ کوئی شخص نیب کی تحویل میں نہیں مرا۔ شہزاد اکبر اور نیب کے بیان میں تضاد ہے۔ میں چاہتا ہوں اتفاق رائے سے مسئلے کا حل نکالا جائے۔

متعلقہ خبریں