جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

نواز شریف ووٹ کو عزت کیوں نہیں دے رہے، سال کے آخر تک ش لیگ اور ن لیگ الگ ہوں جائیں گے : شیخ رشید

سال کے آخر تک

لاہور : شیخ رشید نے کہا ہے کہ اس سال کے آخر تک ش لیگ اور ن لیگ الگ ہوں جائیں گے۔ ن لیگ کے دو گروپ ایک جگہ پر رہ نہیں سکتے۔

وزیر ریلوے شیخ رشید نے پریس کانفرنس میں کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کے شکر گزار ہیں کہ نثار میمن کی بطور سی او منظوری دی۔ لاہور. اے سی سٹینڈرز کا پانچ فیصد کرایہ کم کرنے فیصلہ کیا ہے۔ پوری تیاری میں ہیں، گندم اور چینی اٹھائیں گے۔ 20 تاریخ تک ایم ایل ون کے ٹینڈر ہوجائے گے، یہ عمران خان کی حکومت کا گیم چینجر منصوبہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے کراچی کو منی ہیڈ کوارٹر بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔ ریلوے میں ایسے افسران ہیں جو 20 ویں گریڈ میں آگئے لیکن کوئی کام تک نہیں کیا، افسران کو لاہور سے کراچی بھیجیں گے۔

موٹر وے زیادتی معاملے پر ان کا کہنا تھا کہ گوجرپورہ والے واقعے کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے، یہ ایسا داغ ہے جس سے دنیا میں ندامت ہوئی۔ امید ہے ملزمان کو جلد گرفتار کرلیا جائے گا۔

سی سی پی او کے متنازع بیان پر ان کا کہنا تھا کہ ہر انسان میڈیا کے سوالوں کا جواب دینے کا اہل نہیں ہوتا، سی سی پی او نے غیر ذمہ دارانہ اور بغیر سوچے سمجھے دیا۔

یہ بھی پڑھیں : 30 دسمبر تک اپوزیشن کا برا حال ہوگا، اے پی سی میں مسلم لیگ (ن) سے شہباز لیگ نکلے گی : شیخ رشید

مسلم لیگ (ن) کے حوالے سے شیخ رشید نے کہا کہ سیاسی طور پر لندن بھگوڑوں اور اشتہاریوں کی آماجگاہ بنتا جارہا ہے۔ جو لوگ عدالتوں میں مفرور لوگ لندن میں چھپ رہے ہیں۔ نواز شریف، سلمان شہباز اور الطاف حسین سمیت جو عدالتوں کو مطلوب ہیں وہ لندن کو پناہ گاہ بنائے ہوئے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ اس سال کے آخر تک ش لیگ اور ن لیگ الگ ہوں جائیں گے۔ ن لیگ پتھر مارنے والی اور ش لیگ سنگ تراش ہوگی۔ ن لیگ کے دو گروپ ایک جگہ پر رہ نہیں سکتے۔

نواز شریف کی وطن واپسی پر ان کا کہنا تھا کہ اب نواز شریف ووٹ کو عزت کیوں نہیں دے رہے، کیوں سرینڈر نہیں کررہے۔ عدالتیں کہہ رہیں ہیں جو شخص اسپتال داخل نہیں ہوا وہ کس قسم کا بیمار ہے۔ پیناڈول تو یہاں سے بھی مل سکتی ہے، شہباز شریف اور نواز شریف کے کیسز آئین اور قانون کے مطابق ہیں، شہباز شریف پاکستان آکر غلطی کی اب پچھتارہے ہیں۔

سوالوں کے جواب دیتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ چیف جسٹس جو بیان دیتے ہیں ٹھیک دیتے ہیں۔ وفاق اور سندھ میں اچھے تعلقات ہونے چاہیے، تعلقات سے نواز شریف ٹائپ لوگوں افسوس ہوگا۔

ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ چینی اور آٹا آرہا ہے، یہ مسئلہ سہی طریقے سے ہینڈل نہیں ہوا، اس بحران کے ذمہ دار ہم ہیں، وزیر اعظم سبسڈی دیں گے، مہنگائی کنٹرول میں آجائے گی۔

متعلقہ خبریں