جی ٹی وی نیٹ ورک
بریکنگ نیوز

نام کیساتھ وزیراعظم لکھنے سے کچھ نہیں ہوتا، ریلیف دینا حکومت ہوتی ہے : امیر مقام

نام کیساتھ وزیراعظم

پشاور : امیر مقام کا کہنا ہے کہ عوام کو ریلیف دینا حکومت ہوتی ہے، نام کیساتھ وزیراعظم لکھنے سے کچھ نہیں ہوتا۔

پشاور ہائی کورٹ میں امیرمقام کی درخواست ضمانت پر سماعت ہوئی۔ جسٹس روح الامین اور جسٹس لعل جان نے سماعت کی۔ ہائی کورٹ نے امیرمقام کی ضمانت میں توسیع کردی۔

جسٹس روح الامین نے ریمارکس دیئے کہ اب نیب قانون میں تبدیلی ہوئی ہے، مجاز فورم سے رجوع کرسکتے ہیں۔ قانون سے کوئی مسئلہ ہے تو اس کو چیلنج کریں۔

یہ بھی پڑھیں : عبدالقدوس بزنجو اور یار محمد رند وزارت اعلیٰ بلوچستان کے لیئے امیدوار

امیر مقام کے وکیل نے کہا کہ نیب عدالت اس وقت قبل ازگرفتاری ضمانت دینے کی پوزیشن میں نہیں۔ جسٹس روح الامین نے کہا کہ ایسا نہ کہیں اگر عدالت سزاء دے سکتی ہے تو ضمانت کیوں نہیں۔ ہمیں بتایا جائے کہ نئے قانون کے تحت احتساب عدالت نے کتنی ضمانتیں دی؟ کیا قانون میں تبدیلی کے بعد اس کیس کو سن سکتے ہیں، معاونت کی جائے۔ عدالت نے سماعت غیر معینہ مدت کیلئے ملتوی کردی۔

امیر مقام نے پیشی کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ لگ رہا ہے کہ سب سے بڑے چور ہم ہیں۔ اصل چوروں سے کوئی پوچھنے والا نہیں۔ ن لیگ کا ساتھ دینا اگر جرم ہے تو کرتے رہیں گے۔

انہوں نے کہا کہ سب لوگ گو عمران گو کے نعرے لگا رہے ہیں۔ عمران نے ہر ادارے کو بدنام کردیا، مہنگائی حد سے بڑھ گئی۔

ان کا کہنا تھا کہ عوام کو ریلیف دینا حکومت ہوتی ہے، نام کیساتھ وزیراعظم لکھنے سے کچھ نہیں ہوتا۔  پوری قوم کا مطالبہ ہے کہ عوام کے حقیقی نمائندوں کو منتخب کیا جائے۔

متعلقہ خبریں